سندھ مہمان نواز صوبہ ہے, بھارت سے آئے لوگ سندھ کے شہری بن گئے، مراد علی شاہ

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کا کہنا ہے کہ موجودہ دور حکومت میں سندھ میں کوئی بھی دہشت گردی کا واقعہ نہیں ہوا یہ بات انہوں نے سندھ اسمبلی اجلاس کے درمیان کی ان کا مزید کہنا تھا کہ سندھ میں دہشت گردی کے واقعات دیکھے ہیں جن میں سہون شریف کا دھماکہ، صفورہ کا واقعہ، امجد صابری ، خالد محمود سومرو اور ولی بابر کے قتل شامل ہیں، لیکن کوئی ایک واقعہ بھی ایسا نہیں ہے جو حکومت نے حل نہ کیا ہو۔ دوسری طرف خیبر پختونخوا میں آرمی پبلک اسکول اور جیل بریک واقعات کے ذمہ داروں کا ابھی تک پتا نہیں چل سکا ہے۔

انہوں نے کہا کہ جب ڈوریں کہیں اور سے کھینچنا بند ہوگئیں تو اپوزیشن نےتعاون کیا، اپوزیشن ارکان کی تجاویز کابینہ میں زیرغور لائینگے ۔
وزیراعلیٰ مراد علی شاہ نے کہا کہ سندھ صوفیوں کی دھرتی کہلاتی ہے، میرے آباء واجداد عرب سے آئے، کچھ بلوچ دوست یہاں آئے اور سندھی بن گئے، پاکستان بننے کے بعد بھارت سے آئے لوگ اس صوبے کے شہری بن گئے، یہ مہمان نواز صوبہ ہے۔

اپنے دوستوں کے ساتھ شیئر کریں

یہ بھی پڑھیے