لینڈ مافیا کا مفرور کارندہ منشا بم سپریم کورٹ پہنچ گیا

لینڈ مافیا کا مفرور کارندہ منشا بم عدالت کے سامنے پیش ہو گیا ۔ تفصیلات کے مطابق زمینوں پر قبضوں اور لینڈ مافیا کا کارندہ منشا بم آج سپریم کورٹ پہنچا۔ مفرور ملزم منشا بم سپریم کورٹ میں چیف جسٹس کے چیمبر میں پیش ہوا اور کہا کہ میں خود کو عدالت کے حوالے کرنے آیا ہوں۔ میں پولیس سے چھُپ کر چیف جسٹس سے ملاقات کے لیے آیا ہوں، اگر چیف جسٹس نہ ملے تو میں انتظار کروں گا۔
منشا بم نے کہا کہ میرے خلاف سیاسی مقدمات بنائے گئے ہیں۔ میں ایک خاندانی بندہ ہوں اور میں نے کسی کی زمین پر قبضہ نہیں کیا۔ یاد رہے کہ منشا بم کے خلاف لاہور میں زمینوں پر قبضے کا معاملہ سپریم کورٹ میں ہے۔ 10 اکتوبر کو لاہور کی انسداد دہشتگردی عدالت نے بھی منشا بم کے خلاف ایل ڈی اے ٹیم پر حملہ کیس کی سماعت کی۔
دوران سماعت عدالت نے منشاء بم اور اس کے چاروں بیٹوں کے شناختی کارڈ نمبر نادرا سے بلاک کروانے کا حکم دے دیا اور منشا بم اور اس کے چاروں بیٹوں کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری دوبارہ جاری کر دیئے۔
عدالتی حکم کے باوجود منشاء بم روپوش تھا اور پولیس منشا بم کو گرفتار کرنے یا اس کا کھوج لگانے کے حوالے سے تاحال کوئی کامیابی حاصل نہیں کر سکی تھی۔ منشا بم کی روپوشی پر 4 اکتوبر کو منشا بم اور بیٹوں کے وارنٹ گرفتاری جاری کیے گئے تھے۔ عدالت نے منشا بم کو بیٹوں سمیت گرفتار کر کے 10 اکتوبر کو عدالت میں پیش کرنے کا حکم دے رکھا تھا۔ جس کے بعد 10 اکتوبر کو بھی منشا بم کو پیش نہ کر سکنے پر عدالت نے ایس ایچ او جوہر ٹاؤن کو رپورٹ عدالت پیش کرنے کا حکم دیا۔

اپنے دوستوں کے ساتھ شیئر کریں

یہ بھی پڑھیے

Leave a Comment