گیارہویں امام ہونے کے دعوےدار کی جان پولیس کے شکنجے میں

پاکستان کے صوبہ پنجاب میں آج پولیس نے توہین اسلام کے قانون کے تحت خود کو اسلام کے گیارہویں امام بننے کے دعوے دار کو گرفتار کر لیا ہے پولیس نے فرحان احمد کو 1 ویڈیو نشر کرنے کے بعد گرفتار کیا جس میں اس نے اپنے آپ کو گیارہویں امام کا دعوی دار بنایا تھا

احمد، صوبائی دارالحکومت لاہور سے 200 کلومیٹر کے فاصلے پر، ساہیوال کا رہائشی ہے.

پولیس نے بتایا کہ احمد نے اپنے پیروکاروں کو بتایا کہ صوفی بزرگ نے اپنی "ظہور” کے بارے میں پہلے ہی پیش گوئی کی ہے.

احمد نے کہا، "وزیر اعظم اور آرمی چیف نے مجھ سے ان کی بیعت کی قسم کھائی ہے.”

انہوں نے دعوی کیا کہ وہ امام مہدی کی ظاہری شکل کا محافظ تھے. انہوں نے پاکستان کے نوجوانوں کو ان میں شامل ہونے کے لئے مدعو کیا، ان سے ان سے بیعت کی حلف لینے کے لئے ان پر زور دیا.

پولیس یہ بھی تحقیق کر رہے ہیں کہ آیا اس نے کسی بھی ذہنی خرابی کی وجہ سے یہ دعوی کیا ہے. پولیس نے ان کے بعض پیروکاروں کے بیانات بھی درج کی ہیں.

اپنے دوستوں کے ساتھ شیئر کریں

یہ بھی پڑھیے

Leave a Comment